اسٹیٹ بینک کی مالی سال 2021 کی دوسری سہہ ماہی رپورٹ جاری

جنگ نیوز

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے معاشی کیفیت پر مالی سال 2021 کی دوسری سہہ ماہی رپورٹ جاری کردی۔

رپورٹ کے مطابق معاشی بحالی کے اثرات دوسری سہہ ماہی میں نمایاں ہونے لگے ہیں، زرعی، صنعتی اور خدمات کے شعبے ترقی دکھا رہے ہیں، کوویڈ کی دوسری لہر میں لاک ڈاؤن کی ضرورت نہیں رہی، صفر اعشاریہ مہنگائی 7 سے 9 فیصد رہنے کے اندازے ہیں۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ  ترسیلات زر 26.5ارب سے 27.5 ارب ڈالر رہنے کی توقع ہے،  مالی سال 22 سے سالانہ امپورٹ 47 سے 48 ارب ڈالر ہوگی، آئندہ مالی سال سے بجٹ خسارہ جی ڈی پی تناسب سے 6.5 سے 7.5 فیصد رہے گا۔

 آئندہ مالی سال جاری خسارہ جی ڈی پی تناسب سے 1 فیصد رہے گا،رواں مالی سال کا معاشی منظر نامہ بہتر ہوا ہے، کامیاب ویکسینیشن مہم بحالی کو مزید بہتر بنائے گی۔

اسٹیٹ بینک کی رپورٹ کے مطابق کاروباری اعتماد بتدریج بہتر ہورہا ہے، آئی ایم ایف پروگرام بیرونی فنانسنگ کا اضافی مواقع پیدا کرے گا، آئی ایم ایف ملکی معیشت کے ساختی مسائل ریفارم ایجنڈے کو سپورٹ کرتا ہے۔



Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے