برطانیہ کے فوجی سربراہ نے خطے میں امن کے لئے پاکستان کی کوششوں کی تعریف کی

برطانیہ کے آرمی چیف نے راولپنڈی میں چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کے دوران افغانستان میں قیام امن کے لئے پاکستان کی کوششوں کو سراہا۔

پاکستان اور برطانیہ کے فوجی سربراہان کے مابین ہونے والی ملاقات کی تصدیق پیر کو جاری کردہ ایک بیان میں آئی ایس پی آر نے کی۔

برطانیہ کے چیف آف ڈیفنس اسٹاف جنرل سر نکولس پیٹرک کارٹر نے سی او اے ایس باجوہ سے ملاقات کی اور انہوں نے دو طرفہ اور دفاعی تعاون کو بڑھانے کے لئے اقدامات پر تبادلہ خیال کیا۔

آئی ایس پی آر کے بیان میں کہا گیا ہے کہ دونوں نے افغان امن عمل اور علاقائی سلامتی میں موجودہ پیشرفت پر تبادلہ خیال کیا۔

آئی ایس پی آر کے بیان کے مطابق ، معززین معززین نے خطے میں امن اور استحکام کے لئے پاکستان کی مخلصانہ کوششوں خصوصا افغان امن عمل کی تعریف کی۔

آئی ایس پی آر کے بیان میں کہا گیا ہے کہ پرنس فلپ ، ڈیوک آف ایڈنبرگ کے غمزدہ انتقال پر سی او ایس باجوہ نے برطانیہ کے فوجی سربراہ سے اظہار تعزیت کیا اور کہا کہ دنیا نے ایک انتہائی قابل احترام دوست کو کھو دیا ہے۔

اس میں مزید کہا گیا کہ سی او ایس باجوہ نے پاکستان میں کورونا وائرس کے خلاف جنگ میں برطانیہ کی شراکت پر معززین کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ پاک فوج برطانیہ کے ساتھ اپنے دوستانہ تعلقات کی "بہت قدر کرتی ہے”۔


.

Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے