کابل سے نکلنے کی کوشش میں قومی ٹیم کا فٹبالر بھی ہلاک

کابل سے نکلنے کی کوشش میں قومی ٹیم کا فٹبالر بھی ہلاک

طالبان کے کابل پر کنٹرول حاصل کرنے کے بعد ایئرپورٹ سے امریکی طیارے پر لٹک کر روانہ ہونے کی کوشش میں 19 سالہ فٹبالر زکی انوری بھی ہلاک ہوگیا۔

ہلاک ہونے والے اس فٹبالر کی عمر سے اندازہ لگاجاسکتا ہے کہ یہ اس وقت پیدا ہوا تھا جب طالبان کا گزشتہ اقتدار ختم ہوچکا تھا جبکہ اس نے ممکنہ طور پر اس دور کی صرف کہانیاں ہی سنی ہوں گی۔

افغانستان بالخصوص کابل پر طالبان کے کنٹرول کے بعد جہاز کے ذریعے متعدد افراد نے وہاں سے نکلنے کی کوشش کی۔

اس کوشش کی دل دہلا دینے والی ویڈیوز منظر عام پر آئیں جن میں لوگوں نے امریکی ایئرفورس کے سی 17 طیارے میں زبردستی سوار ہونے کی کوشش کرتے دیکھا گیا۔

اڑان کے لیے چلتے ہوئے طیارے پر لوگوں نے چڑھنے کی کوشش کی اور کامیاب بھی رہے، تاہم اس کے بعد ملنے والی اطلاعات کے مطابق ان میں سے 2 افراد طیارے سے گر پڑے اور ہلاک ہوئے، جبکہ متعدد کے بارے میں کوئی اطلاعات نہیں۔

اسی طرح حالیہ اطلاعات کے مطابق طیارے کے لینڈ کرجانے کے بعد جب اس کی جانچ کی گئی تو اس کے پہیے سے بھی انسانی باقیات برآمد ہوئیں۔

تاہم اب بتایا جارہا ہے کہ افغانستان کی بین الاقوامی یوتھ ٹیم کے فٹبالر نے بھی اسی طیارے پر سوار ہونے کی کوشش کی تھی۔

اس نوجوان کے فٹبال کلب خراساں لائنز نے بتایا کہ امریکی طیارے سی 17 کی ویڈیو میں جن نوجوانوں کو طیارے پر لٹکتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے کہ ان میں فٹبالر زکی انوری بھی شامل تھے۔

بتایا گیا ہے کہ قطر پہنچنے والے طیارے میں زکی انوری کی باقیات بھی موجود تھیں۔



Source link

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے